بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم کے ذریعے کشمیریوں کی جدو جہد کو دبا نہیں سکتا :آرمی چیف
02 اپریل 2018 (18:23)

اسلام آباد :آرمی چیف جنرل قمر جاوید باوجوہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی بربریت کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ بھارت کشمیری عوام کے حق خود ارادیت کو مظالم کے ذریعے نہیں دبا سکتا۔ڈی جی آئی ایس پی آر میجر جنرل آصف غفور کی جانب سے جاری بیان کے مطابق آرمی چیف جنرل قمر جاوید باوجوہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی جانب سے نہتے عوام پر مظالم کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے۔آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا کہ بھارت مقبوضہ کشمیر میں مظالم کے ذریعے وہاں کے عوام کے حق خود ارادیت کے جاری سیاسی جدو جہد کو دبا نہیں سکتا۔

جنرل قمر جاوید باجوہ نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی سیکیورٹی فورسز کی بربریت اور لائن آف کنٹرول اور ورکنگ باو¿نڈری پر سیز فائر کی خلاف ورزیوں اور عام شہریوں کو نشانہ بنائے جانے کی بھی شدید مذمت کی ہے۔خیال رہے کہ بھارتی فورسز نے مقبوضہ کشمیر کے اضلاع اسلام آباد اور شوپیاں میں فائرنگ کر کے 17 نہتے کشمیری نوجوانوں کو شہید اور 100 سے زائد کو زخمی کر دیا تھا۔بھارتی فورسز کے مظالم کے خلاف آج مقبوضہ کشمیر میں یوم سیاہ منایا جا رہا ہے اور پوری وادی میں شٹر ڈاو¿ن ہڑتال کی جا رہی ہے۔

علاوہ ازیں جنرل ہیڈ کوارٹرز راولپنڈی میں امریکی قائم مقام نائب وزیرِ خارجہ برائے جنوبی و وسطی ایشیا ایلس ویلز نے سربراہ پاک فوج جنرل قمر جاوید باجوہ سے ملاقات کی ہے۔ ملاقات میں خطے میں امن و امان کی صورت حال اور باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا اور الزام تراشیوں کے بجائے خطے میں امن کیلئے مثبت تعاون جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا۔ آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کا کہنا تھا کہ پاکستان قومی سوچ کے ساتھ خطے بالخصوص افغانستان میں امن و استحکام کیلئے پرعزم ہے۔ خطے کے دیگر ممالک سے بھی توقع رکھتے ہیں کہ وہ بھی اس عمل میں مساوی اور مثبت کردار ادا کریں گے۔ایلس ویلز کا کہنا تھا کہ امریکا نے خطے میں پائیدار امن کا عزم کر رکھا ہے اور دیرپا امن کیلئے کی جانے والی تمام کوششوں کی حمایت کرتا ہے۔


ای پیپر