سرکاری اداروں کی نجکاری کا کوئی ارادہ نہیں‘اسد عمر
01 اکتوبر 2018 (20:57) 2018-10-01

اسلام آباد:وفاقی وزیرخزانہ اسد عمر نے کہا ہے کہ تجربہ کار افراد کو لا کرقومی اداروں کو ملک کیلئے منافع بخش ادارے بنایا جائےگا۔

گزشتہ روز اپنے ایک بیان میں وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ حکومت سرکاری اداروں کی نجکاری کا کوئی ارادہ نہیں رکھتی،زرمبادلہ کے ذخائرناکافی تھے کیونکہ ملک کی مختلف مالیاتی ضروریات پوری کرنے کیلئے ہر ماہ تقریبا 2 ارب ڈالرخرچ ہوجاتے ہیں۔ اسد عمر نے کہا کہ حکومت برآمدی مصنوعات میں اضافے کیلئے برآمدات میں اضافہ، سرمایہ کاری کا فروغ اور ملک میں صنعتی ترقی چاہتی ہے۔

وزیرخزانہ نے کہا کہ ملکی معیشت میں غیریقینی صورتحال اس ماہ کے وسط تک ختم ہوجائےگی کیونکہ اقتصادی اصلاحات حکومت کی اولین ترجیحات میں شامل ہے۔انہوں نے کہا کہ حال ہی میں عالمی مالیاتی ادارے کی ایک ٹیم نے پاکستان کا دورہ کیا ہے تاہم اس کا بیل آٹ پیکج سے کوئی تعلق نہیں ہے۔ اسد عمر نے کہا کہ درمیانی آمدنی والے لوگوں کو صحت اور تعلیم کارڈ فراہم کیے جائیں گے تاکہ انہیں سماجی تحفظ کے دائرے میں لاکر معیاری سہولیات فراہم کی جائیں۔

واضح رہے کہ 18 ستمبرکو وزیرخزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ قرضے واپس کرنے کیلئے نہیں قرضوں پر سود دینے کے لیے قرضے لے رہے ہیں، تمام اقدامات کے نتائج آنے میں تھوڑا وقت لگے گا۔


ای پیپر