World Health Organization
01 مارچ 2021 (19:07) 2021-03-01

جنیوا : ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے چیف سائنسدان سومیا وشوناتھن نے عوام کو بڑے خطرے سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ دنیا کی صرف 10 فیصد آبادی میں عالمی وبا کے اینٹی باڈیز پائے جاتے ہیں ،جس سے اس بات کا واضح خطرہ ابھی موجود ہے کہ عالمی وبا کی ویکسین نہ لگانے سے یہ تیزی سے پھیل سکتی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق پوری دنیا میں جہاں عالمی وبا کے کیسز میں تیزی سے کمی واقع ہوئی ہے وہیں ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن نے عوام کو بڑے خطرے سے آگاہ کرتے ہوئے کہا کہ صرف50 سے 60فیصد آباد ی میں کرونا وائر س کے اینٹی باڈیز پائے جاتے ہیں ،باقی ماندہ لوگوں نے اگر بروقت عالمی وبا کی ویکسین نہ لگائی تو یہ وبا دوبارہ تیز ی سے پھیل سکتی ہے ۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے چیف سائنسدان کا کہنا تھا کہ اس وقت دنیا میں موجود عالمی وبا کی ویکسین بہتر انداز سے وبا کا مقابلہ کر رہی ہیں ،انہوں نے کہا اس وقت بھی زیادہ آبادی والے شہروں میں خطرہ زیادہ موجود ہے ،اس وبا سے بچنے کا واحد حل کرونا ویکسین ہی ہے ۔

ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے چیف سائنسدان سومیا کا مزید کہنا تھا کہ حال ہی میں منظور کی جانے والی ویکسینز سے متعلق ابھی بھی کچھ شکوک و شہبات پائے جاتے ہیں ،ابھی دیکھنا یہ ہے کہ ویکسین انتہائی اور معمولی علامات میں کیسے ری ایکٹ کر تی ہے ۔


ای پیپر