فوج اورعدلیہ میں بداعتمادی سب سے بڑاچیلنج ہے: فواد چوہدری
01 جنوری 2020 (21:32) 2020-01-01

اسلام آباد : وفاقی وزیر سائنس و ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا ہے کہ اگر اپوزیشن سمجھتی ہے کہ سسٹم لپیٹا جائے تو اس سے سب کے سب لپٹے جائیں گے اور حالات کسی کے بھی کنٹرول میں نہیں ہوں گے۔

ایک انٹرویو میں وفاقی وزیر سائنس اینڈ ٹیکنالوجی فواد چوہدری نے کہا کہ اگر ملک میں سسٹم لپیٹا گیا تو سب ہی جائیں گے، احتساب کے ادارے اور الیکشن کمیشن پر انگلیاں نہیں اٹھنی چاہئیں۔ رانا ثناء اللہ کے کیس میں کئی معاملات میں ہینڈلنگ بہتر ہو سکتی تھی لیکن نہیں ہوئی۔نواز شریف حالات درست ہونے تک واپس نہیں آئیں گے۔ احتساب کے ادارے اور الیکشن کمیشن پر انگلیاں نہیں اٹھنی چائیں افتخار چوہدری کی بحالی کے بعد سے عدلیہ کے معاملے سیٹل نہیں ہورہے، چاروں عدالتوں کے سربراہان کو غور کرنے کی ضرورت ہے۔

انہوں نے کہا کہ 2020کا آغاز دو اداروں کے درمیان عدم اعتماد سے ہوا ہے اور حکومت کیلئے سب سے بڑا چیلنج ہے جبکہ حکومت اور اپوزیشن کے درمیان بھی بد اعتمادی کا خاتمہ ضروری ہے، پاک فوج اور عدلیہ کے درمیان جسٹس افتخار چوہدری کی تحریک کے بعد سے ہی معاملہ حل نہیں ہو رہا ہے اور آئین کے اندر موجود پراسیس پر عمل نہیں ہو رہا۔  اپوزیشن نیب قانون کو درست نہیں کہتی تھی اور تبدیلی بھی چاہتی تھی اب تبدیلی کر دی ہے تو خلاف ہو گئے ہیں۔


ای پیپر